ویڑیو

ای پیپر

اہم خبریں

آج یہاں سنور کلی پورہ ماگام میں گلشن کلچرل فورم کشمیرکے اہتمام سے ایک ادبی.

جدید دور میں گرمی دینے والے آلات کے باوجود بھی کانگڑی کی اہمیت برقرار

آٹھ زونوں سے لڑکوں اور لڑکیوں نے حصہ لیا
پلوامہ/ تنہا ایاز /
یوتھ سروسز.

یدی پورہ پٹن میں فورسز اور جنگجوئوں کے درمیان مسلح تصادم

   196 Views   |      |   Saturday, January, 16, 2021

2جنگجو جاں بحق ،فوجی میجر،2ایس پی او اہلکارزخمی ,بب ہاڑ پلوامہ میں گولیوں کے تبادلہ کے بعد وسیع علاقے کا محاصرہ ،انٹرنیٹ سروس معطل

پٹن ،پلوامہ؍4،ستمبر ؍بارہمولہ کے یدی پورہ پٹن میں فورسز اور جنگجوئوں کے درمیان مسلح تصادم آرائی میں 2جنگجوجاں بحق ہوئے، جبکہ اس جھڑپ میںایک فوجی میجر اور جموں کشمیر پولیس کے 2 ایس پی او زخمی ہوئے جن کو فوری طورعلاج کے لئے ہسپتال منتقل کیا گیا۔دن بھر جاری رہنے والی اس جھڑپ میں ایک رہائشی مکان تباہ جبکہ چند ایک کو شدید نقصان پہنچا ہے ۔ادھر پلوامہ کے بب ہاڑ علاقے میں میں فورسز اور جنگجوئوں کے درمیان گولیوں کا شدید تبادلہ ہوا ۔ فائرنگ کے بعد فورسز نے پورے علاقے کو محاصرے میں لے کرجنگجوئوں کی تلاش شروع کی ہے۔پلوامہ میں انٹرنیٹ سروس کو معطل کیا گیا ۔کشمیر نیوز سروس ( کے این ایس ) کے مطابق شمالی کشمیر کے ضلع بارہمولہ کے یدی پورہ پٹن میں فوج کی29آر آر،سی آر پی ایف اورپولیس کے ایس او جی اہلکاروں کی مشترکہ ٹیم نے جمعہ کی صبح جنگجو مخالف آپریشن عمل میں لایا ۔فورسز کو اطلاع ملی تھی کہ گائوں میں دو سے تین جنگجو موجود ہیں ،جس کے بعد اس گائوں کا محاصرہ کرکے تلاشی کارروائی عمل میں لائی گئی ۔پولیس ذرائع نے بتایا اس دوران جب تلاشی پارٹی اس گھر کے صحن میں داخل ہوئی جہاں انہیں جنگجوئوں کی موجودگی کے حوالے سے اطلاع موصول ہوئی تھی ۔پولیس ذرائع نے بتایا تلاشی پارٹی صحن میں داخل ہونے کے ساتھ ہی یہاں موجود جنگجوئوں نے تلاشی پارٹی پر شدید فائرنگ کر کے یہاں سے فرار ہونے کی کوشش کی ہے۔فائرنگ کے دوران یہاں موجود اہلکاروں نے جوابی فائرنگ کی اور جنگجوئوں کو یہاں سے فرار ہونے کا موقع نہیں دیا ۔شدید فائرنگ کے دوران ابتدائی میں کچھ وقت تک یہاں مکین مکان میں ہی بند رہے جن کو بعد میں صیح سلامت باہر نکالا گیا ۔عام شہریوں کو مکان سے باہر نکالنے کے فورسزبعد جنگجوئوں کو فورسز کے درمیان تصادم شروع ہوا ہے۔ابتدائی گولیوں کے تبادلے میںایک فوجی میجر گولی لگنے کی وجہ سے شدید زخمی ہوا ،جسکو فوری طوربارہمولہ کے بیس کیمپ منتقل کیا گیا،جہاں زخمی میجر کاعلاج معالجہ جاری ہے۔اس دوران مکان میں موجود جنگجوئوں اور فورسز کے درمیان سہ پہر تک گولیوں کا تبادلہ وقفے وقفے سے جاری رہا، جس میں جموں کشمیر پولیس کے ایس او جی ونگ میں کام کرنے والے2ایس پی او اہلکار زخمی ہوئے جن کو ہسپتال منتقل کیا گیا ہے ۔کئی گھنٹوں تک جاری رہنے والی اس جھڑپ میں ایک رہائشی مکان مکمل طور تباہ ہوا ہے۔تصادم کی جگہ سے پولیس نے 2جنگجوئوں کی لاشوں کو برآمد کر لیا ہے۔ تاہم ان کی فوری شناخت طاہر نہیں کی گئی ہے۔پولیس نے جائے جھڑپ سے کچھ قابل اعتراض مواد برآمد کر کے ایک کیس درج کر لیا ہے ۔اس دوران جھڑپ میں زخمی ہونے والے فوجی میجر کے حوالے سے یہ افواہ پھیل گئی ہے کہ وہ زخموں کی تاب نہ لا کر دم توڑ بیٹھا، جس کے بعد دفاعی ترجمان کی جانب سے ایک بیان سامنے آیا ہے جس میں میجر کی شناخت روہت مہرا کے طور کی گئی ہے ۔ترجمان نے بتایا زخمی میجر کو 92بیس کیمپ سرینگر میں داخل کیا گیا ہے، جہاں وہ زیر علاج ہے اور اسکی حالت مستحکم ہے۔ادھر جنوبی کشمیر کے بب ہار پلوامہ نامی گائوں میں پولیس اور فوج کی ایک مشترکہ پارٹی نے جمعہ کے روز بعد سپہر گائوں میں جنگجوئوں کے موجود گی کے حوالے سے اطلاع موصول ہونے کے بعد محاصرے میں لیا اور جنگجوئوں کی تلاش شروع کی ہے۔ ذرائع نے بتایا اس دوران یہاں موجود جنگجوئوں نے فورسز پر فائرنگ کی ہے جس دوران فورسز نے بھی جوابی فائرنگ کی اورگولیوں کی گھن گرج سے پورا علاقہ لرز اٹھا ہے۔ پولیس ذرائع نے بتایا ابتدائی فائرنگ کے بعد یہاں خاموشی چھائی ہے جبکہ جنگجوئوں کی تلاش آخری اطلاعات ملنے تک جاری تھا۔مقامی لوگوں نے بتایا کہ ابتدائی فائرنگ کے بعد تازہ فائرنگ نہیں ہوئی۔ تاہم انٹرنیٹ سروس کو معطل کیا گیا ۔

متعلقہ خبریں

تحریر: رشید پروین ؔسوپور سلسلہ روزو شب نقش گر حادثات
سلسلہ روزو شب اصل حیات و ممات
سلسلہ روزو شب تارِ حریر.

بہ گلشن بدرنی چھس پننہ تہ پننہ انجمن گلشن کلچرل فورم کشمیرکین تمام ارکانن ہندہ طرفہ کشیر ہندین سرکردہ تہ نمایندہ.

گزشتہ شب گلشن کلچرل فورم کشمیراور لسہ خان فدا فاؤنڈیشن نے مشترکہ طور سلسلہ قادریہ وفاضلی کے معروف صوفی بزرگ اور.

تحریر: حافظ میر ابراھیم سلفی عشرتی گھر کی محبت کا مزا بھول گئے
کھا کے لندن کی ہوا عہد وفا بھول گئے
قوم کے غم.

آج یہاں سنور کلی پورہ ماگام میں گلشن کلچرل فورم کشمیرکے اہتمام سے ایک ادبی نشست بزم فریاد منعقد ہوئ۔ کئ مہینوں کے.