ویڑیو

ای پیپر

اہم خبریں

آج یہاں سنور کلی پورہ ماگام میں گلشن کلچرل فورم کشمیرکے اہتمام سے ایک ادبی.

جدید دور میں گرمی دینے والے آلات کے باوجود بھی کانگڑی کی اہمیت برقرار

آٹھ زونوں سے لڑکوں اور لڑکیوں نے حصہ لیا
پلوامہ/ تنہا ایاز /
یوتھ سروسز.

پاکستان نے بھارتی ہائی کمیشن کے دو اہلکاروں کو واپس بھیج دیا

   216 Views   |      |   Tuesday, January, 26, 2021

سرینگر22//جون//اسلام آباد میں ٹریفک حادثہ کے سلسلے میں گرفتار بھارتی ہائی کمیشن کے دواہل کاروں کو پاکستان سے واپس بھیج دیا گیا۔ مانٹرنگ کے مطابق پاکستانی میڈیا رپورٹوں میں کہا گیا ہے کہ گزشتہ ہفتے اسلام آباد میں ہوئے ٹریفک حادثے میں گرفتار بھارتی ہائی کمشنر کے دو اہلکاروں کو پاکستان نے واپس وطن بھیجا ہے۔ دونوں اہل کار واہگہ بارڈرکے راستے واپس انڈیا چلے گئے ہیں جبکہ ان کے ہمراہ بھارتی سفارتخانے کے سیکنڈسیکرٹری اورایئر ایڈوائزربھی واپس انڈیا گئے ہیں جنہیں موجودہ پاک بھارت تناؤ سے متعلق مشاورت کے لئے نئی دہلی میں طلب کیاگیا ہے۔بھارتی سفارتخانے کے دواہل کاروں سلوادیس پال اوردواموبراہموس کواسلام آباد پولیس نے گزشتہ ہفتے گرفتارکیا تھا تاہم چندگھنٹوں بعدانہیں رہائی مل گئی تھی۔ پاکستانی وزارت کارجہ کا کہنا ہے کہ ان اہل کاروں کو دوران سفرایک شہری کو گاڑی کی ٹکرسے زخمی کرکے فرارہونے اورجعلی کرنسی کے الزام میں گرفتارکیاگیا تھا۔انہوںنے کہاکہ بھارتی سفارتخانے کے اہل کاروں کی تلاشی کے دوران 10 ہزار روپے کی جعلی کرنسی برآمدہوئی تھی جس پرانہیں ناپسندیدہ قراردیکرپاکستان چھوڑنے کا کہا گیاتھا۔بھارتی سفارتخانے کے دونوں اہل کار پیرکی صبح واہگہ بارڈرپہنچے ، ان کے ساتھ بھارتی سفارتخانے کے دوسینئرآفیشلز گروپ کیپٹن مانومیڈھا اور سیکنڈ سیکرٹری شیوکماربھی شامل تھے۔سفارتی ذرائع کے مطابق دونوں سینئرآفیشلز کیپٹن مانومیڈھا اور شیوکمار کو موجودہ پاک بھارت تناؤ کے حوالے سے مشاورت کے لئے نئی دہلی میں طلب کیاگیا ہے اور وہ چندروزمیں واپس آجائیں گے۔

متعلقہ خبریں

تحریر:سیفی سرونجی
(بشکریہ استوتی اگروال) صلاح الدین پرویز اور حقانی القاسمی کی دوستی سے کون واقف نہیں ہے ۔ حقانی.

تحریر: سبزار احمد بٹ۔۔اویل نورآباد نوید کا باپ سبحان کھڑکی پر بیٹھ کر زور زور سے حقہ پی رہا تھا اور دھواں اس قدر.

اردو کی 16 سالہ قلمکار اور”انتساب عالمی“کی نائب مدیرہ   تحریر: انیس جاوید اردو زبان وہ زبان ہے جو اپنی سلاست،.

تحریر:حافظ میر ابراھیم سلفی ہمارے سر کی پھٹی ٹوپیوں پہ طنز نہ کر
ہمارے تاج عجائب گھروں میں رکھے ہیں تاریخ کے.

افسانہ نگار:الف عاجزؔ کلسٹر یونیورسٹی سرینگر  امی جان میں نکل رہا ہوں ، واپسی پر وہ ساری چیزیں لے کر آؤں گا جن.