ویڑیو

ای پیپر

اہم خبریں

آج یہاں سنور کلی پورہ ماگام میں گلشن کلچرل فورم کشمیرکے اہتمام سے ایک ادبی.

جدید دور میں گرمی دینے والے آلات کے باوجود بھی کانگڑی کی اہمیت برقرار

آٹھ زونوں سے لڑکوں اور لڑکیوں نے حصہ لیا
پلوامہ/ تنہا ایاز /
یوتھ سروسز.

عالمی یومِ خواتین کے سلسلے میں ادبی تقریب کا اہتمام

   508 Views   |      |   Sunday, January, 24, 2021

سرینگر// جموں اینڈ کشمیر اکیڈیمی آف آرٹ، کلچر اینڈ لینگویجز کی طرف سے عالمی یومِ خواتین کے سلسلے میں ایک محفلِ مشاعرہ کا اہتمام کیا گیا جس میں مختلف زبانوں سے تعلق رکھنے والی نامور شاعرات نے اپنا کلام پیش کیا۔ یہ تقریب اکیڈیمی کے صدر دفتر واقع لال منڈی منعقد ہوئی جس کی صدارت پروفیسر نسیم شفائی نے کی جبکہ ڈاکٹر شبنم عشائی بطورِ مہمانِ خصوصی تقریب میں موجود تھیں۔ تقریب کی صدر نسیم شفائی نے اپنے صدارتی کلمات میں عالمی یومِ خواتین کے حوالے سے اپنے خیالات کا اظہار کرتے ہوئے ادب خصوصاً کشمیری ادب میں خواتین کے کنٹری بیوشن پر روشنی ڈالی۔ وہ لل دید ہو یا حبہ خاتون، ارنہِ مال ہو ر یا ر’ژ د‘دہر ایک نے کشمیری ادب کا دائرہ وسیع اور مالا مال کیا۔ انہوں نے عالمی یومِ خواتین پر اکیڈیمی کی طرف سے مشاعرے کے انعقاد کو سراہتے ہوئے کہا کہ اس سے خواتین کو اپنی ادبی صلاحیتیںنکھارنے کے مواقع فراہم ہوں گے۔انہوں نے عالمی یومِ خواتین پر اکیڈیمی کی طرف سے اس تقریب کے انعقاد پرمبارکباد پیش کی۔ اس سے قبل اکیڈیمی کے چیف ایڈیٹر محمد اشرف ٹاک نے اپنی استقبالیہ تقریر میں اکیڈیمی کی طرف سے خواتین کے لئے مخصوص پروگراموں کا ایک تفصیلی خاکہ پیش کیا اور کہا کہ ادب، تمدن اور فن کے مختلف شعبوں میں خواتین کی بھرپور شراکت داری کو یقینی بنایا جارہا ہے تاکہ اُن کو اپنی صلاحیتوں کے بھرپور اظہار کے مواقع مل سکیں۔ تقریب میں جن شاعرات نے اپنا کلام پیش کیا اُن میں حمیدہ شاہ اختر، شاہدہ شبنم، ظریفہ جان، روٗحی جان، نسیم شفائی، شگفتہ زاہد، حلیمہ قادری، نکہت نظر، شبنم عشائی، پروین راجہ، شکیلہ بیگم، عابدہ نوید، شازیہ کوثر، ریحانہ عزیز، نسرین خان، بشارت النساء شامل ہیں۔ تقریب میں زندگی کے مختلف شعبوں سے تعلق رکھنے والی خواتین کی ایک بھاری تعداد شامل تھی۔ تقریب کی نظامت کے فرائض ڈاکٹر نکہت نظر نے انجام دئے اور شکریہ کی تحریک اکیڈیمی کی سِٹاف آرٹسٹ نصرت جان نے پیش کی۔

متعلقہ خبریں

تحریر: رشید پروین ؔسوپور سلسلہ روزو شب نقش گر حادثات
سلسلہ روزو شب اصل حیات و ممات
سلسلہ روزو شب تارِ حریر.

بہ گلشن بدرنی چھس پننہ تہ پننہ انجمن گلشن کلچرل فورم کشمیرکین تمام ارکانن ہندہ طرفہ کشیر ہندین سرکردہ تہ نمایندہ.

آج یہاں سنور کلی پورہ ماگام میں گلشن کلچرل فورم کشمیرکے اہتمام سے ایک ادبی نشست بزم فریاد منعقد ہوئ۔ کئ مہینوں کے.

جدید دور میں گرمی دینے والے آلات کے باوجود بھی کانگڑی کی اہمیت برقرار
روایتی فیرن میں تبدیلی،بازاروں میں کوٹ.

آٹھ زونوں سے لڑکوں اور لڑکیوں نے حصہ لیا
پلوامہ/ تنہا ایاز /
یوتھ سروسز انیڈ سپورٹس کی مجانب سے میکس ویل کالج.