ویڑیو

ای پیپر

اہم خبریں

آج یہاں سنور کلی پورہ ماگام میں گلشن کلچرل فورم کشمیرکے اہتمام سے ایک ادبی.

جدید دور میں گرمی دینے والے آلات کے باوجود بھی کانگڑی کی اہمیت برقرار

آٹھ زونوں سے لڑکوں اور لڑکیوں نے حصہ لیا
پلوامہ/ تنہا ایاز /
یوتھ سروسز.

سوپور کراس فائرنگ واقعہ کادرد ناک پہلو ‘ْناناکی موت ، 3 سالہ معصوم نواسہ معجزیاتی طور محفوظ رہا

   237 Views   |      |   Wednesday, January, 20, 2021

سرینگر؍یکم ،جولائی؍سرینگر کے مضافاتی علاقہ مصطفیٰ کالونی ایچ ایم ٹی کی فضا ئوں میں رقت آمیز چیخ وپکار گونج رہی ہے ۔’سوپور کراس فائرنگ‘ واقعہ کی دردناک تصاویر جب سوشل میڈیا پر وائرل ہوئیں ،جس میں خون میں لت پت65سالہ شہری کی نعش سر راہ پڑی ہے اور اس کا3سالہ نواسہ قریب ہی خون کے آنسو بہارہا ہے،توقسمت اور بد قسمتی کا پہلو بھی سامنے آیا ۔تفصیلات کے مطابق سرینگر کے مضافاتی علاقہ مصطفیٰ کالونی ایچ ایم ٹی میں رہائش پذیر خان خاندان کے سر پر غموں کا پہاڑ ٹوٹ پڑا جب اُنہیں یہ خبر ملی بشیر احمد خان ماڈل ٹائون سوپور فائرنگ واقعہ میں جاں بحق ہوا ۔بدھ کی صبح سات اور ساڑھے سات بجے کے درمیان ماڈل ٹائون سوپور میں سی آر پی ایف پارٹی پر جنگجوئوں نے فائرنگ کی ،جوابی کارروائی میں فورسز نے بھی فائرنگ کی ۔طرفین کے مابین گولیوں کے تبادلے کے دوران پیشہ سے ٹھیکیدار 65سالہ بشیر احمد خان ساکنہ مصطفیٰ کالونی ایچ ایم ٹی اپنے 3سالہ نواسہ عیاد کیساتھ ذاتی گاڑی JK01AF/903کسی کام کے سلسلے میں سوپور جارہے تھے ۔پولیس کا کہنا ہے کہ جنگجوئوں کی فائرنگ کے نتیجے میں سی آر پی ایف اہلکار اور مذکورہ عام شہری جاں بحق ہوئے جبکہ متعدد اہلکار زخمی ہوئے اور فائرنگ کے اس واقعہ میں مہلوک شہری کا نواسہ معجزیاتی طور پر محفوظ رہا،جسے سیکیورٹی فورسز نے بچالیا ۔فائرنگ واقعہ کے بعد سوشل میڈیا پر کئی تصاویر وائرل ہوئیں ،جس نے پورے کشمیر کو جھنجھوڑ کر رکھ دیا اور ہر ایک آنسو بہا نے لگا ۔چند کے ایک تصاویر میں عام شہری کی نعش سر راہ پڑی ہے اور اس کے آس پاس کوئی نہیںہے ۔یہ تصویر میں عام شہری کی نعش کے ارد گرد سیکیورٹی فورسز اہلکار ہیں ۔اس کے ساتھ سوشل میڈیا پر ایک تصویر وائرل ہوئی ،جس میں تین سالہ معصوم نواسہ اپنے جاں بحق نانا کے پیٹ پر بیٹھا ہوا ہے اور وہ خون کے آنسو بہا رہا ہے ۔ایک تصویر میں دیکھا جاسکتا ہے کہ سی آر پی ایف کا ایک اہلکاردیوار کیساتھ پوزیشن میں ہے اور وہ بچے کو اشارہ کرکے اپنی طرف بلا رہا ہے ۔ایک ویڈ یو کلپ میں معصوم عناد پولیس جپسی میں روتے ہوئے کہتا ہے’مجھے گھر جانا ہے ‘۔پولیس اہلکاروں نے بچے کو صدمے سے باہر نکلانے کیلئے چاکلیٹ اور بسکٹس بھی دئے ۔پولیس نے اپنے سوشل میڈیا اکائونٹ پرایک تصویر شیئر کی جس میں اہلکار نے روتے ہوئے بچے کو اپنی گودمیں لیاہے اور پولیس نے لکھا ’’جموں وکشمیر پولیس نے تین سالہ معصوم کو بچالیا جب سوپور میں ملی ٹنٹوں نے فائرنگ کی ‘۔اس دردناک واقعہ کی تصاویر کس نے لی اور کس نے سوشل میڈیا پر وائرل کی ،یہ الگ بحث ہے ۔تاہم اس درد ناک واقعہ کا ایک پہلو یہ ہے کہ نواسہ اپنے نانا سے ہمیشہ ہمیشہ کیلئے جدا ہوا۔واقعہ میں جاں بحق شہری بشیر احمد خان کے لواحقین کا الزام ہے کہ اُسے گاڑی سے اتار ا گیا اور گولی مار کر قتل کیا گیا ۔لواحقین کے مطابق بشیر احمد پیشہ سے ٹھیکیدار تھے ،اور وہ سوپور ذاتی کام کے سلسلے میں جارہے تھے اور انکے ساتھ اُن کا تین سالہ نواسہ بھی تھا ،ہمیں نہیں معلوم تھا کہ وہ زندہ لوٹ کر نہیں آئیں گے ۔جاں بحق شہری کی رہائش گاہ ماتم کدے میں تبدیل ہوئی تھی اور یہاں ہر ایک زار زار آنسو بہا رہا ۔علاقے کی خاموش فضائوں میں رقت آمیز چیخ وپکار سنائی دے رہی تھی۔جاں بحق شہری کی بیٹی نے روتے روتے کہا’جنہوں نے میرے والد کو قتل کیا ،اُنہیں بھی گولی ماری جائے ،اُنہیں نظر نہیں آیا ،میرا والد معصوم بچے کیساتھ ہے ‘۔جاں بحق شہری کے بیٹے نے الزام رعائد کیا کہ اُسکے والد کو گاڑی سے اُتار کر گولی مار کر قتل کیا گیا ۔ایس ایس پی سوپور جاوید اقبال کا کہنا ہے کہ شہری نے پہلے اپنے نواسہ کو بچایا اور اس بیچ اُسے گولی لگی اور جاں بحق ہوا ۔فائرنگ کی وجہ سے کئی گاڑیاں یہاں رُک گئیں ،اُنہوں نے اپنی گاڑیاں چھوڑیں اور محفوظ مقامات کی طرف بھاگ گئے ،بدقسمتی سے ایک شہری کو گولی لگی اور جاں بحق ہوا ۔سی آر پی ایف ترجمان نے ایک بیان جاری کیا ،جس میں بتایا گیا کہ ماڈل ٹائون سوپور میں فورسز اہلکاروں کی تعیناتی عمل میں لائی جارہی تھی ،تو یہاں گھات میں بیٹھے ملی ٹنٹوں نے فورسز پر اندھا دھند فائرنگ کی جسکے نتیجے میں 4سی آر پی ایف اہلکار زخمی ہوئے جن میں ہیڈ کانسٹیبل دیپ چند ورما ازجان ہوا جبکہ بھویا راجیش ،دیپک پٹیل اور نیلیش چائودے زخمی ہوئے ۔ملی ٹنٹ حملے میں ایک شہری بھی موقعے پر ہی جاں بحق ہوا ۔دریں اثنای جوں ہی جاں بحق شہری کی میت آبائی علاقہ پہنچائی گئی تو کہرام اور صف ماتم بچھ گئی ۔بعد ازاں اُسے آبائی قبر ستان میں پُر نم آنکھوں کیساتھ سپرد لحد کیا گیا ۔کے این ایس

متعلقہ خبریں

تحریر: رشید پروین ؔسوپور سلسلہ روزو شب نقش گر حادثات
سلسلہ روزو شب اصل حیات و ممات
سلسلہ روزو شب تارِ حریر.

بہ گلشن بدرنی چھس پننہ تہ پننہ انجمن گلشن کلچرل فورم کشمیرکین تمام ارکانن ہندہ طرفہ کشیر ہندین سرکردہ تہ نمایندہ.

گزشتہ شب گلشن کلچرل فورم کشمیراور لسہ خان فدا فاؤنڈیشن نے مشترکہ طور سلسلہ قادریہ وفاضلی کے معروف صوفی بزرگ اور.

تحریر: حافظ میر ابراھیم سلفی عشرتی گھر کی محبت کا مزا بھول گئے
کھا کے لندن کی ہوا عہد وفا بھول گئے
قوم کے غم.

آج یہاں سنور کلی پورہ ماگام میں گلشن کلچرل فورم کشمیرکے اہتمام سے ایک ادبی نشست بزم فریاد منعقد ہوئ۔ کئ مہینوں کے.