ویڑیو

ای پیپر

اہم خبریں

آج یہاں سنور کلی پورہ ماگام میں گلشن کلچرل فورم کشمیرکے اہتمام سے ایک ادبی.

جدید دور میں گرمی دینے والے آلات کے باوجود بھی کانگڑی کی اہمیت برقرار

آٹھ زونوں سے لڑکوں اور لڑکیوں نے حصہ لیا
پلوامہ/ تنہا ایاز /
یوتھ سروسز.

سری نگراورجموں شہر میں صرف ’سبز پٹاخے ‘استعمال کرنے کی اجازت

   143 Views   |      |   Tuesday, January, 26, 2021

سری نگراورجموں شہر میں صرف ’سبز پٹاخے ‘استعمال کرنے کی اجازت

تمام ڈپٹی کمشنروں کو سرکاری احکامات پرعمل درآمد کویقینی بنانے کی ہدایت
سری نگر:۱۱،نومبر//جموں وکشمیر کی حکومت نے کہاہے کہ سرمائی دارالحکومت جموں اورگرمائی راجدھانی سری نگرمیں صرف گرین پٹاخوں کو فروخت اور استعمال کرنے کی اجازت ہوگی ۔بدھ کے روز جموں و کشمیر حکومت کی تشکیل کردہ ایک کمیٹی نے جموں و سری نگر شہر میں پٹاخوںکے استعمال کی سفارش کی لیکن ساتھ ہی خبردارکیاکہ اگر اس میں کوئی خلاف ورزی ہوئی ہے تو کارروائی کی جائیگی ۔جے کے این ایس کے مطابق ایک سرکاری آرڈرزیرنمبر89-JK(DMRRR)آف 2020بتاریخ 10نومبر2020 کے مطابق ، ریاستی ایگزیکٹو کمیٹی نے جموں اورسری نگر میں پٹاخوں کی فروخت اور استعمال سے متعلق سرگرمیوں کو باقاعدہ کرنے کے لئے ہدایات جاری کی ہیں اور ان دونوں شہروں میںصرف گرین پٹاخے کے استعمال کی سفارش کی ہے۔ حکومت نے کہا کہ جموں اور سری نگر کے شہروں میں صرف گرین پٹاخوں کو فروخت اور استعمال کرنے کی اجازت ہوگی۔تہواروں کے دوران سبزپٹاخوں کا استعمال صرف2 گھنٹے تک ہی محدود رہے گا۔ وقت دیوالی اور گروپورناب پر رات8 بجے سے رات 10 بجے تک ہوگا۔ سرکاری اعلامیہ میں کہا گیا ہے کہ کرسمس کے موقع پر صبح 6بجے سے صبح 8 بجے تک اور 11بجکر55منٹ سے 12بجکر30منٹ تک۔سرکاری اعلامیہ میں کہا گیا ہے کہ تمام ڈپٹی کمشنر اسی سلسلے میں وسیع پیمانے پر عوامی آگاہی مہم چلائیں گے۔اس اعلامیہ میں جموں و کشمیر کے ریاستی آلودگی کنٹرول بورڈ کو مجاز قرار دیا گیاہے کہ وہ شہروں میں مختصر مدت کے محیط فضائی معیار کے خلاف ریگولیٹری پیرامیٹرز کے علاوہ ، ایلومینیم ، بیریم ، آئرن کے پیرامیٹرز کے لئے14 دن تک (فوری طور پر شروع ہو رہا ہے) مختصر مدت کی نگرانی کرے گا۔ پٹاخے پھٹنے کے سلسلے میں سی پی سی بی کے ذریعہ تجویز کردہ معیار کی اقدارکویقینی بنایاجائیگا۔سرکاری اعلامیہ میںخبردارکیاگیاہے کہ پٹاخوں کے پھٹنے سے پیدا ہونے والی آلودگی سے متعلق اعداد و شمارجمعکرنے میں مدد ملے گی اور پٹاخوں کی تیاری میں استعمال ہونے والے ایلومینیم ، بیریم ، اور آئرن کے معیار کو کنٹرول کرنے اور ان کے کنٹرول میں مدد ملے گی۔مذکورہ ہدایات کی کسی بھی خلاف ورزی سے ڈیزاسٹر مینجمنٹ ایکٹ کے سیکشن51 سے61 کے تحت فوری طور پر تعزیرات کی کارروائی کی تحت کارروائی کی ائے گی۔ آرڈر میں مزید کہا گیا ہے کہ آئی پی سی کی دفعہ 188 کے تحت قانونی کارروائی اور اس کے علاوہ دیگر دفعات بھی قابل عمل ہیں۔سرکاری آرڈرکے مطابق پٹاخوں کے استعمال پرپابندی یکم دسمبر2020تک جاری رہے گی ۔حکومت نے اس پابندی کی وجہ بتاتے ہوئے کہاہے کہ جموں وکشمیر میںکوروناوائرس کاپھیلائو جاری ہے اوریہاں موسم سرماشروع ہونے والاہے ،اوراس دوران چھوٹے بچوں ،بزرگ شہریوں ،بیماروں اوردیگرلوگوں کوپٹاخے سرکئے جانے سے تکلیف ہوسکتی ہے ،اسلئے دسمبر کے اوائل تک تہواروں کے مواقعوں پر پٹاخوں کے کاروبار اوراستعمال پرپابندی عائد کی جاتی ہے۔

متعلقہ خبریں

تحریر: رشید پروین ؔسوپور سلسلہ روزو شب نقش گر حادثات
سلسلہ روزو شب اصل حیات و ممات
سلسلہ روزو شب تارِ حریر.

بہ گلشن بدرنی چھس پننہ تہ پننہ انجمن گلشن کلچرل فورم کشمیرکین تمام ارکانن ہندہ طرفہ کشیر ہندین سرکردہ تہ نمایندہ.

گزشتہ شب گلشن کلچرل فورم کشمیراور لسہ خان فدا فاؤنڈیشن نے مشترکہ طور سلسلہ قادریہ وفاضلی کے معروف صوفی بزرگ اور.

تحریر: حافظ میر ابراھیم سلفی عشرتی گھر کی محبت کا مزا بھول گئے
کھا کے لندن کی ہوا عہد وفا بھول گئے
قوم کے غم.

آج یہاں سنور کلی پورہ ماگام میں گلشن کلچرل فورم کشمیرکے اہتمام سے ایک ادبی نشست بزم فریاد منعقد ہوئ۔ کئ مہینوں کے.