ویڑیو

ای پیپر

اہم خبریں

محبوبہ مفتی کو ملک سے بغاوت کرنے کی پادائش میں فوری طورپر گرفتار کیا جانا.

محبوبہ مفتی علیحدگی پسندوں کی بولی بول رہی ہیں۔ پیپلز الائنس کی کوئی عوامی.

عصمت دری کرنے والوں کے حق میں ترنگا ریلی نکال کر بھاجپا نے کی ترنگے کی توہین:محبوبہ.

جنگلاتی زمین ہڑپنے کا الزام/سابق وزیر لال سنگھ کے خلاف سی بی آئی نے شروع کی ابتدائی تحقیقات

   133 Views   |      |   Tuesday, October, 27, 2020

سرینگر ؍25،جون؍ جنگلاتی زمین مبینہ طور ہڑ پنے کے الزام میں مرکزی تفتیشی بیورو ( سی بی آئی) نے جموں وکشمیر کے سابق وزیر لال سنگھ کے خلاف ابتدائی تحقیقات شروع کردی ہے ۔سی بی آئی لال سنگھ کی سر پرستی میں چل رہے ایجو کیشنل ٹرسٹ کی تحقیقات کرے گی ۔کشمیر نیوز سروس مانیٹر نگ ڈیسک کے مطابق جموں وکشمیر کے سابق وزیر چودھری لال سنگھ کی سرپرستی میں چلنے والے ایجو کیشنل ٹرسٹ کیخلاف سرکاری زمین ہڑپنے کے الزام میںمرکزی تفتیشی بیو رو ( سی بی آئی) نے ابتدائی تحقیقات کا آغاز کیا ہے۔میڈیا رپورٹ کے مطابق لال سنگھ کے تعلیمی ادارے ،آر بی ایجوکیشنل ٹرسٹ کٹھوعہ پر جنگلاتی زمین ہڑپنے کا الزام ہے۔ نیز سی بی آئی نے ضلع کٹھوعہ میں محکمہ مال اور جنگلات کے نامعلوم ملازمین کیخلاف بھی تحقیقات شروع کی ہے، جنہوں نے سرکاری زمین کو فروخت کیا ہے۔ابتدائی تحقیقات میں یہ بھی الزام سامنے آیا ہے کہ جعلی سندیں اجرا ء کی گئی ہیں ،جن میں بتایا گیا کہ جائیداد جموں وکشمیر زرعی اصلاحات ایکٹ1976کے دائر ے میں نہیں آتی ہے ۔میڈیا رپورٹ میںذرائع کا حوالہ دیتے بتایا گیا ہے کہ مذکورہ ایجو کیشنل ٹرسٹ نے غیر قانونی طور پر سرکاری زمین ایک بڑا حصہ ہڑپ لیا ہے اور اب سی بی آئی کی تمام نظر یں محکمہ مال اور جنگلات ریکارڈ س پر نظر یں مرکوز ہیں ۔رپورٹ میں بتایا کہ ابتدائی تحقیقات میں الزامات بھی سامنے آگئے ہیں کہ سال2015میں جموں وکشمیر ہائی کورٹ میں ا س حوالے سے ایک جعلی بیان حلفی جمع کرایا گیا ہے ۔مفاد عامہ میں ایک عرضی ہائی کورٹ میں دائر کی گئی تھی ،جس میں شکایت کنندہ نے سرکاری زمین ہڑ پنے اور اس پر غیر قانونی تعمیرات کھڑی کرنے کا الزام عائد کیا گیا تھا ۔اسی حوالے سے ایک بیان حلفی ہائی کورٹ میں جمع کرایا گیا اور لال سنگھ کو کلین چٹ دی گئی تھی ۔میڈیا رپورٹ میں ذرائع کا حوالہ دیتے ہوئے مزید بتایا گیا ہے کہ ابتدائی تحقیقات کیلئے ایف آئی آر درج کرنا ضروری نہیں ۔ابتدائی تحقیقات میں شواہد اور ثبوت کو اکٹھا کیا جائیگا تاکہ با ضابط طور پر اسکی تحقیقات کی جاسکے ۔ابتدائی تحقیقات کے دوران نہ تو چھاپے ڈالے جائیں گے اور نہ کوئی سمن جاری کی جاسکتی ہے ۔ابتدائی تحقیقات 12ماہ مکمل کی جاسکتی ہے ،ابتدائی تحقیقات کو ایف آئی آر میں تبدیل کرنے کیلئے کافی شواہد اور مواد کیساتھ ثبوت ہونا چاہئے جو عدالت میں پیش کیا جاسکے ۔ یاد رہے کہ کٹھوعہ میں ایک کمسن بچی کی عصمت ریزی و قتل معاملے کو لیکرلال سنگھ نے بھارتیہ جنتا پارٹی سے مستعفی ہوکر الگ پارٹی بنائی ہے۔لال سنگھ پی ڈی پی ۔بھاجپا مخلوط حکو مت کے دور اقتدار میں مارچ2015سے اپریل2018تک جنگلات وماحولیات کے وزیر رہے ہیں ۔کے این ایس ؍

متعلقہ خبریں

محبوبہ مفتی کو ملک سے بغاوت کرنے کی پادائش میں فوری طورپر گرفتار کیا جانا چاہئے /رویندر رینا
سرینگر24//اکتوبر///.

محبوبہ مفتی علیحدگی پسندوں کی بولی بول رہی ہیں۔ پیپلز الائنس کی کوئی عوامی اہمیت نہیں ہے /مرکزی وزیر جتندر سنگھ

عصمت دری کرنے والوں کے حق میں ترنگا ریلی نکال کر بھاجپا نے کی ترنگے کی توہین:محبوبہ مفتی سرینگر؍24، اکتوبر ؍ ؍ پی.

تنظیمی ڈھانچہ تشکیل ،ڈاکٹر فاروق سربراہ ،سجاد غنی لون ترجمان مقرر ، جموں وکشمیرکا پرچم اتحاد کی علامت ہوگا
عوامی.

افسر شاہی لوگوں کیلئے وبال جان ، انتظامیہ کا زمینی سطح پر کوئی نام و نشان نہیں: ساگر
سرینگر؍23، اکتوبر ؍ ؍ جموں.