ویڑیو

ای پیپر

اہم خبریں

آج یہاں سنور کلی پورہ ماگام میں گلشن کلچرل فورم کشمیرکے اہتمام سے ایک ادبی.

جدید دور میں گرمی دینے والے آلات کے باوجود بھی کانگڑی کی اہمیت برقرار

آٹھ زونوں سے لڑکوں اور لڑکیوں نے حصہ لیا
پلوامہ/ تنہا ایاز /
یوتھ سروسز.

ایل ڈی اسپتال سرینگر میں خاتون کی موت واقع /اسپتال احاطے میں لوگوں کا احتجاج

   236 Views   |      |   Friday, January, 15, 2021

سرینگر22//جون//ایل ڈی اسپتال سرینگر میں خاتون کی پُرا سرار حالت میں موت واقع ہونے کے بعد لواحقین اور رشتہ داروں نے احتجاجی مظاہرئے کئے اور الزام لگایا کہ ڈاکٹروں کی غفلت کے باعث خاتون کی موت واقع ہوئی ہے۔ میڈیکل سپر انٹنڈنٹ نے لواحقین کے الزامات کو مسترد کرتے ہوئے کہاکہ خاتون دل کا دورہ پڑنے سے فوت ہوء ہے جبکہ اُس کے نمونے جانچ کیلئے لیبارٹری بھیجے گئے ہیں۔ انہوںنے کہاکہ پھر بھی ہم نے تحقیقات کرنے کے احکامات صادر کئے ہیں۔اطلاعات کے مطابق پیر کے روز لعل دید اسپتال سرینگر میں اُس وقت خوف وہراس پھیل گیا جب حاملہ خاتون کی موت واقع ہونے کے بعد لواحقین اور رشتہ داروں نے زبردست احتجاج کیا اور نعرے بازی کی۔ نمائندے نے بتایا کہ خاتون کی موت واقع ہونے کی خبر پھیلتے ہی رشتہ دار اور لواحقین اسپتال کے احاطے میں جمع ہوئے اور الزام لگایا کہ ربینہ زوجہ مشتاق احمد بٹ ساکن لولپورہ ٹنگمرگ کی موت صرف اور صرف خون نہ ملنے کی وجہ سے ہوئی۔ انہوں نے کہاکہ حاملہ خاتون کو خون کی اشد ضرورت تھی تاہم اسپتال انتظامیہ خون جمع کرنے میں ناکام ثابت ہو گئی جس وجہ سے خاتون کی موت واقع ہوئی ہے۔ مظاہرین کے مطابق اگر اسپتال انتظامیہ نے وقت پر خون کا انتظام کیا ہوتا تو خاتون کی موت واقع نہیںہوئی۔ نمائندے نے بتایا کہ 21اور 22جون کی درمیانی رات کو خاتون کو لعل دید اسپتال لایا گیا ۔ ڈاکٹروں نے رشتہ داروں کو بتایا کہ خاتون کو خون کی اشد ضرورت ہے ۔ رشتہ داروں کے مطابق رشتہ داروں نے اپنا خون دینے کے بارے میں اسپتال انتظامیہ کو آگاہ کیا تاہم ڈاکٹروں نے بتایا کہ وہ خون کا انتظام کریں گے ۔ رشتہ داروں نے بتایا کہ کافی وقت گزر جانے کے باوجود اسپتال انتظامیہ خون کا انتظام نہ کر سکی جس کی وجہ سے خاتون کی موت واقع ہوئی۔ لل ید اسپتال کے سپر انٹنڈنٹ ڈاکٹر شبیر احمد نے بتایا کہ خاتون کا بروقت علاج ومعالجہ شروع کیا گیا تاہم دل کا دورہ پڑنے سے اُس کی موت واقع ہوئی ہے۔ انہوںنے کہا کہ خاتون کے نمونے بھی کورونا جانچ کیلئے لیباریٹری بھیجے گئے ہیں۔ سپر انٹنڈنٹ نے الزام لگایا کہ خاتون کے رشتہ داروں نے اسپتال کی توڑ پھوڑ کی ۔ انہوںنے رشتہ داروں سے اپیل کی کہ وہ لاپرواہی کا مظاہرہ نہ کرئے اور جب تک نہ خاتون کی ٹیسٹ رپورٹ موصول نہ ہو تب تک وہ لاش کو گھر نہ لے جائیں۔ انہوںنے کہاکہ جہاں تک رشتہ داروں کی جانب سے تحقیقات کرنی کی بات ہے تو اسپتال انتظامیہ نے پہلے ہی اس بارے میں ڈاکٹروں کو رپورٹ پیش کرنے کے احکامات صادر کئے ہیں۔ انہوںنے کہاکہ اگر لاپرواہی کے حوالے سے ثبوت و شواہد ملے تو ملوثین کے خلاف سخت کارروائی ہوگی۔/ یو پی آئی

متعلقہ خبریں

سالِ گزشتہ عالم انسانیت کیلئے سبق اور آزمائشیوں کا سال اور کرہ ارض کیلئےسالِ مرمت شوکت بڈھ نمبل کشمیری بہت سارے.

تحریر: حافظ میر ابراھیم سلفی
مدرس۔۔۔۔بارہمولہ کشمیر
رابطہ نمبر :6005465614
یہ موسم سرد ہواؤں کا،کیوں لوٹ.

تحریر: رشید پروین ؔسوپور سلسلہ روزو شب نقش گر حادثات
سلسلہ روزو شب اصل حیات و ممات
سلسلہ روزو شب تارِ حریر.

بہ گلشن بدرنی چھس پننہ تہ پننہ انجمن گلشن کلچرل فورم کشمیرکین تمام ارکانن ہندہ طرفہ کشیر ہندین سرکردہ تہ نمایندہ.

گزشتہ شب گلشن کلچرل فورم کشمیراور لسہ خان فدا فاؤنڈیشن نے مشترکہ طور سلسلہ قادریہ وفاضلی کے معروف صوفی بزرگ اور.