ویڑیو

ای پیپر

اہم خبریں

محبوبہ مفتی کو ملک سے بغاوت کرنے کی پادائش میں فوری طورپر گرفتار کیا جانا.

محبوبہ مفتی علیحدگی پسندوں کی بولی بول رہی ہیں۔ پیپلز الائنس کی کوئی عوامی.

عصمت دری کرنے والوں کے حق میں ترنگا ریلی نکال کر بھاجپا نے کی ترنگے کی توہین:محبوبہ.

اپنی مرضی کیخلاف لداخ اور کرگل میں تعینات کشمیر یونیورسٹی ملازمین تذبذب میں مبتلا

   69 Views   |      |   Monday, October, 26, 2020

لداخ یونیوسٹی میں تعینات جموں وکشمیر کے ملازمین کی فوری تبدیلی عمل میں لائی جائے: نیشنل کانفرنس

سرینگر؍21،ستمبر ؍ نیشنل کانفرنس نے لداخ اور کرگل سیٹالائٹ کیمپسوں میں تعینات کشمیر یونیورسٹی کے ملازمین کی حالت زار پر تشویش کا اظہار کرتے ہوئے کہا ہے کہ ریاست کو دو لخت کرنے کے موقعے پر تمام محکموں کے ملازمین سے تعیناتی کے بارے میں آراء پوچھی گئی اور انہیں اپنی انتخاب کی بنیاد پر تبدیل کیا گیا لیکن ان دو کیمپسوں میں تعینات عملہ کو اپنے خواہش کے مطابق تبدیل نہیں کیاگیا، جنہوں نے کشمیر یونیورسٹی میں تعیناتی کا انتخاب کیا تھا۔ پارٹی کے ترجمان عمران نبی ڈار نے کہا کہ جموںوکشمیر کو دولخت کئے جانے کے بعد کشمیر یونیوسٹی کے کرگل اور لداخ کیمپس لداخ یونیورسٹی کا حصہ بن گئے لیکن وہاں تعینات جموں و کشمیر کے ملازمین کو اپنے اصلی محکمہ (کشمیر یونیوسٹی) میں واپس لانے کے بجائے انہیں وہیں تعینات رکھا گیا ہے۔ انہوں نے کہا کہ لداخ اور کرگل میں اپنی مرضی کیخلاف تعینات کشمیر یونیورسٹی کے مذکورہ ملازمین اپنے مستقبل کو لیکر زبردست ذہنی دبائو میں مبتلا ہوگئے ہیں ۔انتظامیہ نے کو چاہئے کہ ان کی تبدیلی کیلئے ٹھوس اور کارگر اقدامات اٹھائیں گے۔ قابل ذکر ہے کہ مذکورہ ملازمین نے نیشنل کانفرنس کے نائب صدر عمر عبداللہ کو ایک تحریری خط بھیجا ہے جس میں انہوں اپنے مشکلات کے بارے میں آگاہی دلائی ہے۔

متعلقہ خبریں

محبوبہ مفتی کو ملک سے بغاوت کرنے کی پادائش میں فوری طورپر گرفتار کیا جانا چاہئے /رویندر رینا
سرینگر24//اکتوبر///.

محبوبہ مفتی علیحدگی پسندوں کی بولی بول رہی ہیں۔ پیپلز الائنس کی کوئی عوامی اہمیت نہیں ہے /مرکزی وزیر جتندر سنگھ

عصمت دری کرنے والوں کے حق میں ترنگا ریلی نکال کر بھاجپا نے کی ترنگے کی توہین:محبوبہ مفتی سرینگر؍24، اکتوبر ؍ ؍ پی.

تنظیمی ڈھانچہ تشکیل ،ڈاکٹر فاروق سربراہ ،سجاد غنی لون ترجمان مقرر ، جموں وکشمیرکا پرچم اتحاد کی علامت ہوگا
عوامی.

افسر شاہی لوگوں کیلئے وبال جان ، انتظامیہ کا زمینی سطح پر کوئی نام و نشان نہیں: ساگر
سرینگر؍23، اکتوبر ؍ ؍ جموں.