ویڑیو

ای پیپر

اہم خبریں

آج یہاں سنور کلی پورہ ماگام میں گلشن کلچرل فورم کشمیرکے اہتمام سے ایک ادبی.

جدید دور میں گرمی دینے والے آلات کے باوجود بھی کانگڑی کی اہمیت برقرار

آٹھ زونوں سے لڑکوں اور لڑکیوں نے حصہ لیا
پلوامہ/ تنہا ایاز /
یوتھ سروسز.

امشی پورہ شوپیان مبینہ فرضی جھڑپ کی فوجی تحقیقات مکمل

   182 Views   |      |   Tuesday, January, 26, 2021

’ضوابط کی خلاف ورزی کا انکشاف‘
افسپا کے تحت قواعد کا حد سے زیادہ استعمال کیا گیا، سپریم کورٹ کے احکامات کی بھی خلاف ورزی کی گئی:دفاعی ترجمان

سرینگر؍18،ستمبر ؍فوج نے امشی پورہ شوپیان مبینہ فرضی جھڑپ کی تحقیقات مکمل کرنے کا اعلان کرتے ہوئے جمعہ کو اس بات کا انکشاف کیا کہ آپریشن کے دوران آر مڈ فورسز اسپیشل پائورس ایکٹ (افسپا) کے تحت حاصل خصوصی اختیارات سے تجاوز بر تا گیا ہے ۔ کشمیر نیوز سروس کے مطابق فوج نے جمعہ کو ایک بیان جاری کرتے ہوئے کہا ہے کہ اْس کی طرف سے امشی پورہ شوپیان انکاونٹر کی جو تحقیقات شروع کی گئی تھی ،وہ مکمل ہوگئی ہے اور اس کے دوران معلوم ہوا ہے کہ اس آپریشن کے دوران قواعد کی خلاف ورزی کی گئی ہے۔ فوج نے کہا ہے کہ حکام نے قواعد کی خلاف ورزی کا مرتکب پانے والوں کیخلاف فوجی قانون کے دائرے میں کارروائی کے احکامات صادر کئے ہیں۔فوج نے اپنے بیان میں کہا’امشی پورہ آپریشن کی تحقیقات مکمل ہوگئی ہے جس کے دوران ایسے شواہد ملے ہیں جن سے پتہ چلتا ہے کہ آر مڈ فورسز اسپیشل پائورس ایکٹ (افسپا)کے تحت حاصل خصوصی اختیارات کا حد سے زیادہ استعمال کیا گیا ہے اور سپریم کورٹ کے احکامات کی بھی خلاف ورزی کی گئی ہے‘۔فوج کے بیان میں مزید بتایا ’متعلقہ حکام نے ہدایت دی ہے کہ مرتکبین کیخلاف فوجی قانون کے تحت کارروائی شروع کی جائے‘۔فوج کی طرف سے جاری بیان میں بتایا گیا ہے کہ جو شواہد ابتدائی تحقیقات کے دوران سامنے آئے ہیں، اْن کے مطابق امشی پورہ معرکہ آرائی میں امتیاز احمد، ابرار احمد اور محمد ابرار نامی تین افراد مارے گئے ہیں جن کا تعلق راجوری سے تھا۔تاہم ڈی این اے ٹیسٹ کا انتظار ہے اور ان کی جنگجویانہ سرگرمیوں میں ملوث ہونے کے بارے میں تحقیقات پولیس کررہی ہے۔بیان میں کہا گیا ہے’بھارتی فوج ضابطہ اخلاق کی پابندہے اور شوپیان امشی پورہ معرکہ کے بارے میں مزید جانکاری مناسب وقت پر منظر عام پر لائی جائے گی ‘۔خیال رہے کہ جنوبی کشمیر کے ضلع شوپیان کے امشی پورہ جنگلی علاقے میں 18جولائی کو ایک فوج وفورسز نے ایک آپریشن کے دوران3عدم شناخت جنگجوئوں کو جاں بحق کرنے کا دعویٰ کیا تھا ۔ تاہم سوشل میڈیا پر لاشوں کی تصاویر منظر عام پر آنے کے بعد راجوری کے3 گھرانوں نے فوج کے دعوے کو بے بنیاد قرار دیتے ہوئے جاں بحق کئے گئے 3نوجوانوں کو اپنے لخت جگر قرار دیا ۔جو راجوری سے شوپیان چند روز قبل مزدوری کی غرض سے آئے ہوئے تھے ۔ادھر سوشل میڈیا میں زیر بحث آئے معاملے پر فوج نے ایک اعلیٰ سطحی کورٹ آف انکوائری کے احکامات صادر کئے جبکہ پولیس اور انتظامیہ نے بھی واقعہ سے متعلق علیحدہ تحقیقات شروع کردی ۔حالیہ دنوں جموں وکشمیر کے لیفٹیننٹ گورنر منوج سنہا نے راج بھون میں ایک پریس کانفرنس کے دوران اس بات کی یقین دہانی کرائی کہ معاملے سے متعلق انصاف کو ہر حال میں فوقیت دی جائے گی ۔ادھر جمعرات کو ڈائریکٹر جنرل آف پولیس دلباغ سنگھ نے بھی کہا تھا کہ چند روز میں ڈی این اے رپورٹ کے نتائج منظر عام پر آئے گی اور اس کیس سے متعلق تمام حقائق سامنے آئیں گے ۔

متعلقہ خبریں

تحریر: رشید پروین ؔسوپور سلسلہ روزو شب نقش گر حادثات
سلسلہ روزو شب اصل حیات و ممات
سلسلہ روزو شب تارِ حریر.

بہ گلشن بدرنی چھس پننہ تہ پننہ انجمن گلشن کلچرل فورم کشمیرکین تمام ارکانن ہندہ طرفہ کشیر ہندین سرکردہ تہ نمایندہ.

گزشتہ شب گلشن کلچرل فورم کشمیراور لسہ خان فدا فاؤنڈیشن نے مشترکہ طور سلسلہ قادریہ وفاضلی کے معروف صوفی بزرگ اور.

تحریر: حافظ میر ابراھیم سلفی عشرتی گھر کی محبت کا مزا بھول گئے
کھا کے لندن کی ہوا عہد وفا بھول گئے
قوم کے غم.

آج یہاں سنور کلی پورہ ماگام میں گلشن کلچرل فورم کشمیرکے اہتمام سے ایک ادبی نشست بزم فریاد منعقد ہوئ۔ کئ مہینوں کے.